موٹروے پر دوران ڈکیتی خاتون سے زیادتی،ملزم 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل منتقل


Mian Fayyaz Ahmed Posted on September 15, 2020

لاہور:انسداد دہشتگردی عدالت نے موٹروے پر دوران ڈکیتی خاتون سے زیادتی کے ملزم شفقت کو 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل منتقل کر دیا ہے۔عدالت نے پراسکیوشن کی ملزم کی شناخت پریڈ کی استدعا منظور کر لی۔ انسداد دہشت گردی عدالت کے جج ارشد حسین بھٹہ نے کیس کی سماعت کی۔گجرپورہ پولیس نے ملزم شفقت کو بکتر بند گاڑی میں لا کر عدالت کے روبرو پیش کیا اس موقع پر ملزم کے چہرے کو کپڑے سے ڈھانپا گیا تھا۔ پراسیکیوشن نے استدعا کی کہ ملزم کی شناخت پریڈ کروانی ہے، 14 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیجا جائے۔عدالت نے پولیس کو حکم دیا کہ جلد از جلد ملزم کی شناخت پریڈ کروائی جائے اور اس کیلئے خصوصی انتظامات کریں۔خیال رکھا جائے کہ ملزم دوسرے ملزموں کیساتھ شامل نہ ہو سکے اور ملزموں کو دوبارہ 29 ستمبر کو پیش کیا جائے

ذرائع کے مطابق اس موقع پر فاضل جج نے ملزم شفقت سے استفسار کیا کہ تم نے کچھ کہنا ہے تو بتاؤ؟ اس کے جواب میں ملزم نے کہا کہ بس جی مہربانی کر دیں۔جج ارشد حسین بھٹہ نے سوال کیا کہ کیا مہربانی کریں؟ جس پر ملزم شفقت نے کہا کہ مجھے چھوڑ دیں۔ فاضل جج نے ملزم سے کہا کہ تمہارا ڈی این اے میچ کر گیا ہے، تم نے کچھ نہیں کیا ہوگا تو چھوٹ جاؤ گے۔اس سے قبل موٹروے پر خاتون کے ساتھ زیادتی کے مرکزی ملزم شفقت کو سیشن کورٹ میں پیش کیا گیا۔ ایڈیشنل سیشن جج مصباح خان نے ملزم کو 6 روزہ جسمانی ریمانڈ کیلئے پولیس کے حوالے کیا۔ ملزم شفقت کی پیشی کے موقع پر سیشن کورٹ میں سخت حفاظتی انتظامامت کئے گئے تھے۔ ملزم کو یہاں بھی کپڑے سے ڈھانپ کر پیش کیا گیا۔